Kaise Karigar Hain Ye

0
47
amjad islam amjad

Kaise kaarigar hain ye!
Aas ke darakhto se
Lafz kaat’te hai aur seerhia banate hai!
Kese baa hunar hai ye!
Gham k beej bote hai
Aur dilo me khushio ki khetia ugate hai
Kese chara gar hai ye!
Waqt ke samander me
Kashtia banate hai, aap toot jate hai

 

 

Kaise Karigar Hain Ye by Amjad Islam Amjad in Urdu written:

کیسے کاریگر ہیں یہ!
آس کے درختوں سے
لفظ کاٹتے ہیں اور سیڑھیاں بناتے ہیں!
کیسے با ہنر ہیں یہ!
غم کے بیج بوتے ہیں
اور دلوں میں خوشیوں کی کھیتیاں اگاتے ہیں
کیسے چارہ گر ہیں یہ!
وقت کے سمندر میں
کشتیاں بناتے ہیں، آپ ڈوب جاتے ہیں

 

 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

:bye: 
:good: 
:negative: 
:scratch: 
:wacko: 
:yahoo: 
B-) 
:heart: 
:rose: 
:-) 
:whistle: 
:yes: 
:cry: 
:mail: 
:-( 
:unsure: 
;-)