Khwabon Ko Baatein Karne Do

0
61
amjad islam amjad

Khwabon Ko Baatain Karne Do by Amjad Islam Amjad

 

 

Aankho me khuwab hai un ki baatai krne do
Honto se wo lafz kaho jo kajal kehta he
Mausam jo sandesa laia us ko parh to lo
Sun to lo wo raaz jo piaasa sahil kehta he

Aati jaati lehroo se kia puch rahi he rait?
Baadal ki dehleez pe tare kio kar bethe hai!
Jharnoo ke us geet ka mukhra kese yaad kia!
Jis ke har ik bol me ham tum baatai kerte hai

Raah guzar ka, mausam ka, naa bearish ka mohtaaj
Wo daria jo har ik dil ke andar behta he
Kha jata he har ik shola waqt ka aatisheen daan
Bas ik naqsh ‘mohabbat’ he jo baaqi rehta he

Aankho me jo khuwab hai un ko baatai krne do
Honto se wo lafz kaho jo kajal kehta he

Khwaabon Ko Baatein Karne Do in Urdu Written:

آنکھوں میں خواب ہیں ان کی باتیں کرنے دو
ہونٹوں سے وہ لفظ کہو جو کاجل کہتا ہے
موسم جو سندیسہ لایا اس کو پڑھ تو لو
سن تو لو وہ راز جو پیاسا ساحل کہتا ہے!

آتی جاتی لہروں سے کیا پوچھ رہی ہے ریت؟
بادل کی دہلیز پہ تارے کیونکر بیٹھے ہیں!
جھرنوں نے اس گیت کا مکھڑا کیسے یاد کیا!
جس کے ہر اک بول میں ہم تم باتیں کرتے ہیں

راہ گزر کا، موسم کا، ناں بارش کامحتاج
وہ دریا جو ہر اک دل کے اندر بہتا ہے
کھا جاتا ہے ہر اک شعلہ وقت کا آتشیں دان
بس اک نقش ‘محبت’ ہے جو باقی رہتا ہے

آنکھوں میں جو خواب ہیں ان کو باتیں کرنے دو
ہونٹوں سے وہ لفظ کہو جو کاجل کہتا ہے

 

 

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

:bye: 
:good: 
:negative: 
:scratch: 
:wacko: 
:yahoo: 
B-) 
:heart: 
:rose: 
:-) 
:whistle: 
:yes: 
:cry: 
:mail: 
:-( 
:unsure: 
;-)